موضوعات برائے زمرہ ‘اسلام’

اولاد کی تربیت کیسے کریں ؟….. رشحاتِ قلم مولانارعایت اللہ فاروقی صاحب

Oct
15

اولاد کی تربیت کیسے کریں … انکے ساتھ کیسا رویہ رکھا جائے …ِ؟ معروف کالم نگار مولانا رعایت اللہ فاروقی صاحب کے قلم سے… مولانا کے چار کالم یکجا ہیں پڑھیں اور مولانا رعایت اللہ فاروقی صاحب کو دعائیں دیں

تربیت اولاد
ـــــــــــ
بچوں پر کل محنت اٹھارہ سال کی ہے، وہ آپکی زبان سے زیادہ آپ کے اعمال سے اثر قبول کرتے ہیں، آپ انہیں کسی کام سے کتنا ہی کیوں نہ منع کر لیں اگر آپ خود اپنی اس نصیحت پر عمل کرنے والے نہیں تو آپ کا بچہ کبھی بھی اس سے باز نہیں آئیگا، اپنی والاد کے لئے آپ کو خود سولی چڑھنا پڑتا ہے، عام طور پر ماں شفیق ہوتی ہے، لیکن کچھ سخت گیر مائیں بھی ہوتی ہیں، اگر آپکی اہلیہ ایسی ہیں تو پھر آپ کو ہر حال میں نرم رہنا پڑیگا ورنہ اولاد باغی ہو جاتی ہے، گھر سے بھاگنے والے بچے ایسے ہی والدین کے ہوتے ہیں، اگر دونوں گرم مزاج ہوں تو اولاد باغی ہوجاتی ہے اور دونوں نرم مزاج ہوں تو اولاد سر چڑھ جاتی ہے، توازن ہر حال میں لازم ہے، بچے کے اوقات مقرر کردیں اور اس ٹائم ٹیبل سے اسے کسی صورت نہ ہلنے دیں، (more…)

تبصرہ کریں

خانوادہٴ صدیقی کے چشم وچراغ اور مشہور محدث و فقیہ قاسم بن محمدرحمة اللہ- حیات وآثار

Sep
25

نام ونسب

          آپ مشہور محدث و فقیہ قاسم بن محمدبن أبی بکر الصدیق عبد اللہ بن عثمان بن عامر بن عمرو بن کعب بن سعد بن تمیم بن مرہ قریشی تیمی مدنی  ہیں ۔( الطبقات الکبریٰ : ۵/ ۱۸۷، تہذیب الکمال : ۲۳/ ۴۳۰)

          ابو محمد ان کی کنیت ہے ،ابو عبد الرحمن بھی کہا جاتا ہے ۔( تاریخ الاسلام :۳/ ۳۲۸)

ولادت باسعادت 

          علامہ ذہبی  نے ”سیر اعلام النبلاء “ میں قاسم بن محمد کی ولادت حضرت علی رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میں ہونا نقل کی ہے ؛ جب کہ ” تاریخ الاسلام “میں حضرت عثمان رضی اللہ عنہ کے زمانہ خلافت میں پیدا ہونا لکھا ہے۔( سیر اعلام النبلاء : ۵/ ۵۴ ،تاریخ الاسلام : ۳/ ۳۲۸) دونوں میں تطبیق یوں ہے کہ ان کی پیدائش اختتام خلافت حضرت عثمان رضی اللہ عنہ اور ابتدائے خلافت حضرت علی رضی اللہ عنہ میں ہوئی ہوگی ۔

          امام بخاری  نے فرمایا کہ ان کے والد محمد بن أبی بکر حضرت عثمان رضی اللہ عنہ کے بعد تقریباً ۳۶ ہجری میں شہیدکیے گئے تو قاسم یتیم ہوئے اورحضرت عا ئشہ رضی اللہ عنہا کی پرورش میں آئے۔ ( تہذیب الکمال ۲۳/ ۴۳۰،تہذیب التہذیب : ۸/ ۳۳۴)

دادا جا ن سے مشابہت

          حضرت عبد اللہ بن زبیر رضی اللہ عنہما نے فرمایامیں نے حضرت ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ کی اولاد میں ان جیسا سوائے قاسم کے کسی اور کو نہیں پایا ۔( سیرأعلام النبلاء:۵/۵۵،تہذیب اکمال:۲۳/۴۳۰) (more…)

تبصرہ کریں

نبی فکری اوراجتہادی بصیرت کے چند جلوے

Dec
14

نبی فکری اوراجتہادی بصیرت کے چند جلوے

 

اسلام کا دائمی معجزہ اورہمیشگی کی حجة اللہ البالغہ ”قرآن“ کے بعد اگر کوئی چیز ہے تو وہ صاحب قرآن کی ”سیرت“ ہے۔ دراصل ”قرآن“ اور ”حیات نبوی صلى الله عليه وسلم “ معاً ایک ہی ہیں، قرآن متن ہے تو سیرت اس کی شرح۔ قرآن علم ہے تو سیرت اس کا عمل، قرآن مابین الدفتین ہے تو یہ ایک مجسم و ممثل قرآن تھا جو مدینہ کی سرزمین پر چلتا پھرتا نظر آتا تھا، کان خلقہ القرآن.

سیرت نبوی کا اعجاز ہے کہ اس کے اندر ہزاروں روشن پہلو ہیں۔ دنیا کو جس پہلو یا گوشے سے روشنی اور گرمی مطلوب ہو، اس کو سیرت نبوی صلى الله عليه وسلم کے بے مثال خزانہ میں وہ اسوہ اور نمونہ مل جاتا ہے جس سے اپنے ہمہ نوعیتی مسائل و مشکلات کا کامیاب ترین حل نکال لے۔ آپ صلى الله عليه وسلم کی زندگی کا کوئی گوشہ تاریکی میں نہیں۔ آپ صلى الله عليه وسلم کی حیات طیبہ کے تمام ہی پہلو سورج سے زیادہ ظاہر وعیاں ہوکر دنیا کے سامنے موجود ہیں، آپ جس پیغام الٰہی کو لے کر دنیا میں تشریف لائے، وہ ساری انسانیت کیلئے ایک ہمہ گیر، مستحکم ومضبوط اور ”عائمی نظام حیات“ ہے اور اس نے اپنی اس امتیازی شان، ہمہ گیری اور دوامی حیثیت کی بقاء کی خاطر اپنے اندر ایسی لچک اور گنجائش رکھی ہے کہ ہر دور میں اور ہر جگہ انسانی ضروریات کا ساتھ دے سکے اور کسی منزل پر اپنے پیروں کی رہبری سے عاجز وقاصر نہ رہے۔

لوگوں کو جس قسم کے مسائل و حالات پیش آسکتے ہیں، ان کی بنیادی طور پر دو قسمیں ہیں: (more…)

تبصرہ کریں

عید کے دن کے اعمال

Aug
08

عید کے دن کے اعمال
* عید کے دن صبح سویرے اٹھنا۔”ویستحب التبکیر وہو سرعة الانتباہ“․(العالمگیریة:1/149،رشیدیة)
* نمازِ فجر اپنے محلے کی مسجد میں پڑھنا۔”ومن المندوبات صلاة الصبح في مسجد حیہ“․(ردالمحتار:۳/۵۶،دارالمعرفة)
* جسم کے زائد بال اور ناخن وغیرہ کاٹنا۔”ویتطیب بإزالة الشعر وقلم الأظفار“․(حلبي کبیر،ص:566،سھیل اکیڈمي)
* غسل کرنا۔
(more…)

تبصرہ کریں

اسباب زوال امت

Aug
05

تبصرہ کریں

روحانی اجتماع و محفل حمد ونعت

Apr
06

 روحانی  اجتماع و محفل حمد ونعت  بمقام خانقاہ مدنی  مدینہ مسجد اٹک لائیو دیکھنے کے لئے
www.madnizahidi.com

تبصرہ کریں

اسلامی تقویم کا آغاز اور اسلام میں محرم کی اہمیت وتعزیہ داری کی حرمت و تاریخ

Nov
15

اسلامی تقویم کا آغاز اور اسلام میں محرم کی اہمیت وتعزیہ داری کی حرمت و تاریخ
از: ضیاء الدین قاسمی ندوی خیرآبادی

اسلامی تقویم کا آغاز محرم الحرام سے ہوتاہے جو کہ اسی فطری نظام کائنات کے تحت جیسا کہ خالق کائنات نے مقرر فرمایا ہے اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید میں ارشاد فرمایا ہے!

اِنَّ عدة الشہور عند اللّٰہ اثنیٰ عشر شہرا فی کتاب اللّٰہ یوم حلق السمٰوات والأرض منہا اربعة حُرمٌ ذلک الدین القیم (سورہ توبہ)

یقینا مہینوں کی تعداد تو اللہ کے نزدیک بارہ ہے اللہ کی کتاب (لوح محفوظ) میں جس دن کہ پیدا کیا آسمانوں اور زمین کو اور ان میں چار حرمت والے مہینے ہیں یہی سیدھا درست دین ہے۔

ان بارہ مہینوں کی ترتیب محرم سے شروع ہوکر ذی الحجہ پر ختم ہوتی تھی اور چار مہینے محرم، رجب، ذیقعدہ اور ذی الحجہ اشہر حرم تھے جن میں قتل وقتال جائز نہیں تھا۔ اہلِ عرب ان چاروں مہینوں کی حرمت کا لحاظ وپاس کرتے تھے حالانکہ ریگستان عرب کے بدووں اور بادیہ نشیں قبائل کی معیشت وزندگی کا دارومدار عام طور پر لوٹ مار پر تھا قافلوں اور مسافروں کو لوٹنا ان کا مشغلہ تھا بلکہ روزی روٹی کے حصول کے لئے ایک قبیلہ دوسرے قبیلہ پر حملہ آور ہوتا رہتا تھا اسی وجہ سے عرب کی سرزمین پر خون خرابہ قتل وقتال اور غارت گری کا ایک چلن تھا جو قبیلہ زیادہ جنگجو ہوتا تھا اس کی عظمت وشوکت تسلیم کی جاتی تھی مگر یہ تمام خون خرابے لوٹ پاٹ اشہر حرم میں موقوف کردئیے جاتے تھے۔ (more…)

تبصرہ کریں

طلاق شرعی رہنمائی قسط نمبر 2۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔از: مفتی اشتیاق احمد قاسمی استاذ دارالعلوم دیوبند

Sep
20

 

تین طلاق کا حکم:

           بہ یک وقت ”تین طلاق“ دینا سخت گناہ ہے، قرآنِ پاک کے بتائے ہوئے طریقے کے خلاف؛ بلکہ قرآنِ پاک کے ساتھ ایک طرح کا کھیل اور مذاق ہے؛ لیکن جس طرح حالتِ حیض میں دی ہوئی طلاق سخت گناہ اور معصیت ہونے کے باوجود پڑ جاتی ہے، اسی طرح ایک دفعہ میں دی ہوئی تین طلاق بھی جمہورِ امت کے نزدیک واقع ہوجاتی ہے، اس پر ائمہٴ اربعہ امام ابوحنیفہ، امام مالک، امام شافعی اور امام احمد بن حنبل رحمہم اللہ متفق ہیں۔ (more…)

تبصرہ کریں

طلاق شرعی رہنمائی قسط نمبر 1۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔از: مفتی اشتیاق احمد قاسمی استاذ دارالعلوم دیوبند

Aug
09

’’نکاح‘‘ عظیم نعمت ہے،اس کے ذریعہ آدمی عفت وعصمت اور پاکدامنی حاصل کرتا ہے، زنا جیسی قبیح حرکت سے محفوظ رہتا ہے، اسی پاکیزہ رشتہ کی برکت سے نسلِ انسانی کی بقا ہے، یہ انبیائے کرام علیہم السلام کی سنت ہے، ایران کے مانی فرقہ کے لوگ، اسی طرح عیسائی راہب اور سادھو سنت؛ اللہ کا تقرب حاصل کرنے کے لیے نکاح نہیں کرتے تھے، اس طریقہ کو اسلام نے بالکلیہ رد کردیا اور سرکار دوعالم صلی اللہ علیہ وسلم نے ایک حدیث میں ”النکاح من سنتی“ (ابن ماجہ:۱/۳۴۰) کی صراحت فرمائی اور دوسری حدیث میں حضرت عثمان بن مظعون کو مخاطب کرکے ارشاد فرمایا کہ: جو شخص میری سنت سے اعراض کرے، وہ میرا نہیں۔ (بخاری:۵۰۶۳) (more…)

تبصرہ کریں

تبلیغی جماعت اشاعت التوحید السنہ کے نشانہ تنقید پر ۔۔۔۔۔۔ مرتب حافظ نثار احمد الحسینی

Aug
09

تبلیغی جماعت اشاعت التوحید السنہ کے نشانہ تنقید پر ۔۔۔۔۔۔     مرتب حافظ نثار احمد الحسینی (more…)

تبصرہ کریں